Home / مستقل سلسلے / فلیٹ ارتھ چیک میٹ / فلیٹ ارتھ چیک میٹ سوال 16

فلیٹ ارتھ چیک میٹ سوال 16

سورج کی روشنی کتنی دوری تک سفر کرتی ہے؟

سال میں دو بار سورج بالکل خط استوا کے اوپر آتا ہےجس کو ہم Equinoxes کہتے ہیں۔  عام طور پر Equinoxeہر سال 20-21مارچ اور 22-23 ستمبر کو ہوتی ہے۔ فلیٹ ارتھرز ان Equinoxesپر آدھی زمین پر دن اور آدھی زمین پر رات بنا کر دیکھاتے ہیں، جیسا کہ آپ پوسٹ پکچر میں دیکھ سکتے ہیں کہ میں نے ایک کالی لائن سے دن اور رات کو الگ الگ دیکھایا ہے۔

 

فلیٹرز کے مطابق سورج غروب نہیں ہوتا بلکہ یہ ہم سے دور جاتا جاتا پراسپیکٹو کی وجہ سے ہماری حد نگاہ سے نکل جاتا ہے اور رات شروع ہو جاتی ہے۔ Equinoxeپر یہ تھیوری بالکل غلط لگتی ہے۔ آپ کو پڑھنے کے ساتھ ساتھ پوسٹ پکچر کو بھی دیکھنا ہو گا۔

 

دائیں طرف کی پیلی لائن آسٹریلیا کے شہر Perth اور بائیں طرف کی پیلی لائن ارجنٹائن کے شہر Buenos Airesتک جا رہی ہے۔ مطلب ان دونوں شہروں میں اس وقت دن ہے اور یہاں تک سورج کی روشنی پہنچ رہی ہے۔

اب آپ دونوں لال لائنوں کو دیکھیں یہ جاپان کے شہر ٹوکیوں اور امریکہ کے شہر بوسٹن تک جا رہی ہیں اور ان دونوں شہروں میں اس وقت رات ہے۔ اگر آپ غور کریں تو ان دونوں شہروں کا فاصلہ پہلے والے دونوں شہروں کی نسبت کم ہے۔

کیا وجہ ہے کہ روشنی دو نزدیکی شہروں تک نہیں جا رہی جبکہ دور کےدو شہروں میں سورج نظر آتا ہے؟ یہ کونسی دیوار ہے جو ایک سیدھ میں فلیٹ زمین پر بن جاتی ہے کہ اس دیوار کے پار روشنی نہیں جا سکتی؟

About محمد سلیم

محمد سلیم ایک کمپیوٹر پروگرامر ہیں اور ایک سافٹ وئیر ہاوس چلا رہے ہیں۔ سائنس خصوصا فلکیات پر پڑھنا اور لکھنا ان کا مشغلہ ہے۔ ان کے مضامین یہاں کے علاوہ دیگر کئی ویب سائٹس پر بھی پبلش ہوتے ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *