Home / عمومی / بکرمی کیلینڈر

بکرمی کیلینڈر

دیسی کیلنڈر کا آغاز 100 قبل مسیح میں ہوا۔ اس کیلنڈر کا اصل نام بکرمی کیلنڈر ہے۔ اس کیلنڈر کا آغاز ہندوستان کے ایک بادشاہ راجہ بکرم اجیت کے دور میں ہوا۔ راجہ بکرم کے نام سے یہ بکرمی سال مشہور ہوا۔ اس شمسی تقویم میں سال وساکھ کے مہینے سے شروع ہوتا ہے۔ 365 دنوں کے اس کیلنڈر کے 9 مہینے 30 دن کے ہوتے ہیں اور ایک مہینہ وساکھ 31 دن اور دو مہینے جیٹھ اور ہاڑ 32 دن کے ہوتے ہیں۔ وساکھ (وسط اپریل تا وسط مئی) جیٹھ (وسط مئی تا وسط جون) ہاڑ (وسط جون تا وسط جولائی) ساون (وسط جولائی تا وسط اگست) بھادوں (وسط اگست تا وسط ستمبر) اسو (وسط ستمبر تا وسط اکتوبر) کاتک (وسط اکتوبر تا وسط نومبر) مگھر (وسط نومبر تا وسط دسمبر) پوہ (وسط دسمبر تا وسط جنوری) ماگھ (وسط جنوری تا وسط فروری) پھاگن (وسط فروری تا وسط مارچ) چیت (وسط مارچ تا وسط اپریل)

بکرمی کیلنڈر میں ایک دن کے آٹھ پہر ہوتے ہیں۔ ایک پہر جدید گھڑی کے مطابق تین گھنٹوں کا ہوتا ہے۔ دھمی ویلا: صبح 6 سے 9 بجے تک کا وقت۔ دوپہر ویلا: صبح 9 بجے سے دوپہر 12 بجے تک کا وقت۔ پیشی والا : دوپہر 12 بجے سے 3 بجے تک کا وقت۔ دیگر ویلا: سہ پہر 3 بجے سے شام 6 بجے تک کا وقت۔ نماشاں ویلا: شام 6 بجے سے لے کر رات 9 بجے تک کا وقت۔ کفتاں ویلا: رات 9 بجے سے رات 12 بجے تک کا وقت۔ ادھ رات ویلا: رات 12 بجے سے سحر 3 بجے تک کا وقت۔ اسور ویلا: صبح 3 بجے سے 6 بجے تک کا وقت ۔

About منامل شاکر

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *