Home / مستقل سلسلے / انگلش سے کیا رنجش / انگلش سے کیا رنجش ۔ تیسری قسط

انگلش سے کیا رنجش ۔ تیسری قسط

پچھلی قسط میں واوَلز اور کانسونینٹس کے بارے میں بیان کیا گیا۔ محسوس کیا گیا کہ اس موضوع پر مزید لکھنے کی بھی ضرورت ہے تاہم اس سلسلے کو بہت طویل ہونے سے بھی بچانا ہے۔ اس لیے سوچا ہے کہ واوَلز اور کانسونینٹس کے بارے میں الگ سے ایک پوسٹ کسی وقت لگا دی جائے۔ اب آج کا سبق شروع کرتے ہیں۔

لفظ(Word):
” لیٹر یا لیٹرز کا گروپ جو معنی رکھتا ہو، ورڈ کہلاتا ہے۔ ”
٭ ورڈ ایک لیٹر پر بھی مشتمل ہو سکتا ہے اور زیادہ لیٹرز پر بھی۔مثلاً
(A) اور (I) ایک لیٹر والے ورڈز ہیں۔ ان میں بطور لیٹر اور ورڈ فرق یہ ہے کہ جب لیٹرز کے طور پر استعمال ہوتے ہیں تو ان کا کوئی معنی نہیں ہوتا۔ لیکن جب یہ کسی جملے میں ورڈ کے طور پر استعمال ہوتے ہیں تو ان کا معنی ہوتا ہے۔ مندرجہ ذیل جملے
(I am a student) میں (I) کا معنی “مَیں” جبکہ (a) کا معنی “ایک” ہے لہٰذا اب یہ ورڈز کہلائیں گے۔
٭ گویا کہ لیٹر اور ورڈ میں فرق “معنی” کا ہوتا ہے۔
٭ ورڈ کی مزید مثالوں میں (am) اور (we) دو لیٹرز والے ورڈز، (two) اور (she) تین لیٹرز والے ورڈ جبکہ (book) اور (goat) چار لیٹرز والے ورڈ ہیں۔
ورڈ کو کسی لینگوئج میں بہت اہمیت حاصل ہے کیونکہ لینگوئج دراصل ورڈز سے بنتی ہے۔ اس لیے اگر ہم کسی لینگوئج کے ورڈز کی شناخت کر لیں تو اس لینگوئج کو سمجھنے میں کافی آسانی پیدا ہوجاتی ہے۔ انگلش میں استعمال ہونے والے ورڈ نو(9) قسم کے ہوتے ہیں۔ یہ ورڈز اجزائے کلام یا گفتگو کے حصے(Parts of Speech) کہلاتے ہیں۔ چونکہ ان کے بارے میں جاننا بہت ضروری ہے اس لئے ان کے بارے میں مختصراً بیان کیا جاتا ہے۔
٭ مختلف ماہرین کے نزدیک ورڈز کی یہ تقسیم مختلف ہو سکتی ہے۔

گفتگو کے حصے (Parts of Speech)
1۔ ناؤن(Noun) 2۔ پروناؤن(Pronoun) 3۔ اَجیکٹِو(Adjective) 4۔ آرٹیکل(Article) 5۔ پریپوزیشن(Preposition)
6۔ کنجنکشن(Conjunction) 7۔ اِنٹرجیکشن(Interjection) 8۔ وَرب(Verb) 9۔ اَیڈوَرب(Adverb)

ناؤن(Noun):
” ایسا ورڈ جو کسی شخص(Person)، جگہ(Place) یا چیز(Thing) کا نام(Name) ہو، ناؤن کہلاتا ہے۔ ”
مثالیں: man, boy, lady, school, Ali, Sara, health, life, gold, iron, class, set etc. . . وغیرہ وغیرہ

ناؤن کی اقسام(Noun):
انگلش میں ناؤن کی پانچ اقسام ہیں۔

کامن ناؤن(Common Noun):
“کامن” کا مطلب ہوتا ہے مشترک یا عام، لہٰذا
” کسی جنس کے تمام ارکان کا مشترک نام، کامن ناؤن کہلاتا ہے۔ ”
مثلاً آدمی ایک جنس ہے، اس جنس کے تمام ارکان کا مشترک نام “آدمی” ہے اس لیے یہ کامن ناؤن ہے۔ اسی طرح شیر ایک جنس ہے اس جنس کے ہر رکن کا نام “شیر” ہوتا ہے لہٰذا شیر بھی کامن ناؤن ہے۔ کامن ناؤن کی مزید مثالیں
Boy, girl, horse, bird, masjid, city, river, mountain, book, pen, chair etc. . .

پراپرناؤن(Proper Noun):
“پراپر” کا مطلب ہوتا ہے باقاعدہ، خاص۔ لہٰذا
” کسی شخص، جگہ یا چیز کا ذاتی یا خاص نام، پراپر ناؤن کہلاتا ہے۔ ”
مثلاً احمد کسی شخص کا ذاتی نام ہے ہم یوں بھی کہہ سکتے ہیں کہ احمد اس شخص کا باقاعدہ یا خاص نام ہے جس سے اس کی پہچان ہوتی ہے۔ اسی طرح بادشاہی مسجد ایک مسجد کا ذاتی یا خاص نام ہے جس سے اس کی پہچان ہوتی ہے۔ مزید مثالیں
Ali, Nimra, Faisal Masjid, Faisalabad, Ravi, K-2, The Quran Paak, Allam Iqbal etc. . .
٭ پراپر ناؤن کا پہلا لیٹر ہمیشہ کیپیٹل ہوتا ہے۔

کامن ناؤن اور پراپر ناؤن میں فرق کیسے کریں؟
پراپر ناؤن بھی اگرچہ ایک سے زیادہ بھی ہو سکتا ہے لیکن یہ کسی جنس کے تمام ارکان کا مشترک نام نہیں ہوتا۔ مثلاً “آدمی” اس جنس کے ہر رکن کا مشترک نام ہے لیکن “احمد” ہر رکن کا مشترک نام نہیں ہے اگرچہ ایک سے زیادہ کا ہو سکتا ہے۔ اس کے علاوہ کامن ناؤن سے کسی خاص شخص، جگہ یا چیز کی طرف دھیان نہیں جاتا لیکن پراپر ناؤن سے کسی خاص شخص، جگہ یا چیز کی طرف دھیان جاتا ہے۔

نوٹ: صرف ناؤن کی تمام اقسام بیان کی جائیں گی باقی پارٹس آف سپیچ کو مختصراً بیان کیا جائے گا۔

About انعام الحق

انعام الحق صاحب کا تعلق پاکستان کے مشہور صنعتی شہر فیصل آباد سے ہے۔ آپ درس و تدریس اور تحقیق کے شعبہ سے وابسطہ ہیں۔ ریاضی اور فزکس سے خصوصی دلچسپی رکھتے ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *